Browsing Category

Ayaz Amir

Find here Urdu Columns of Ayaz Amir

آئی ایم ایف نے مزہ چکھا دیا – ایاز امیر

جملہ کیا ہے کہ سواد آ گیا۔ اسلامی دنیا کی واحد ایٹمی قوت کو بھی سواد چکھایا جا رہا ہے۔ کچھ ہی روز ہوئے ٹی ایل پی والوں کے سامنے گُھٹنے ٹیکنے پڑے اور اِس بری طرح سے کہ گھٹنوں کا کوئی حال نہیں رہا۔ اور اب آئی ایم ایف نے یوں سمجھئے کہ…

رونا کس بات کا؟ – ایاز امیر

صنفِ نازک سے معذرت کے ساتھ کہ اُن کا صیغہ استعمال کرنے کی ضرورت آن پڑی ہے۔ وہ پردہ نشین جس کا نام ریاست کی رِٹ ہے‘ اپنی عزت بچانے میں کامیاب رہی۔ یہ کیا کم کامیابی ہے؟ اگلے تو دندنا رہے تھے اور اپنی بات منوانے پہ تلے ہوئے تھے۔ پنجاب…

میچ کس ماحول میں دیکھنا چاہیے تھا – ایاز امیر

اِتنے عرصے بعد خوشی کا ایک دن ملا۔ سارے دکھ درد ایک طرف کو ہو گئے بس کھلاڑیوں کی پرفارمنس ہی سامنے رہی۔ اور کیا پرفارمنس تھی۔ مجھ جیسے کرکٹ سے نابلد انسان کا دل بھی خوشی سے جھوم اٹھا۔ لیکن کیا اچھا ہوتا کہ گزرے ہوئے دن لوٹ آتے،…

ایک ضیا الحق کافی نہ تھے؟ – ایاز امیر

جنرل ضیا الحق کی نصیحت آموز باتیں سن سن کر ہمارے کان پک گئے تھے۔جس راہ پہ وہ چلے تھے اُس کیلئے وہ کافی تھے حتیٰ کہ کسی آنے والے کیلئے اُنہوں نے وعظ و نصیحت کے میدا ن میں کچھ چھوڑا نہیں تھا۔اِس لئے حیرانی ہوتی ہے جب ایک اور سربراہ…

بات قومی بے شرمی کی ہے – ایاز امیر

قوم کو سبق سکھایا جارہا ہے کہ آف شور کمپنیاں رکھنا قانون کی خلاف ورزی نہیں۔ بالکل درست ہے۔ غربت میں رہنا بھی قانون کی خلاف ورزی نہیں۔ بھوک اور افلاس سے تنگی قانون کے خلاف نہیں۔ خودکشی خلافِ قانون ہے لیکن خودکشی کا سوچنا کہ اِس زندگی…

جیت القاعدہ کی سوچ کی ہوئی ہے – ایاز امیر

ایک بات واضح ہونی چاہئے‘ 9/11 کے حملوں کی پلاننگ اسامہ بن لادن نے نہیں کی تھی۔اُن کو تو بعد میں اطلاع دی گئی کہ اس قسم کی پلاننگ ہو رہی ہے۔ اصل ماسٹر مائنڈ خالد شیخ محمد تھا جو ابھی تک امریکی تحویل میں ہے اور جس کا ٹرائل ابھی تک نہیں…

شکر کریں یہاں طالبان والے حالات نہیں – ایاز امیر

لاکھ کمزوریاں ہماری اور اُن کمزوریوں کا اعتراف بھی ہم کرتے ہیں۔ جب ہم اپنے معاشرے کو برا بھلا کہتے ہیں ہمارا کوئی مقابلہ نہیں کر سکتا لیکن پھر بھی تمام کمزوریوں اور مسائل کے باوجود یہ معاشرہ بہتوں سے بہتر ہے۔ رشوت ہے کرپشن ہے نااہلی…