Browsing Category

Javed Chaudhry

You can read latest columns of Javed Chaudhry on this page. Urdu columns of Javed Chaudhry are updated on daily bases with latest views and words on different aspects of the world including political and country’s situation.

افغان سفیر کی بیٹی – جاوید چوہدری

نجیب اللہ علی خیل پاکستان میں افغانستان کے سفیر ہیں‘ ان کی 27سالہ بیٹی سلسلہ علی خیل کے ساتھ جمعہ 16 جولائی کو ایک حیران کن واقعہ پیش آیا۔ سلسلہ نے دعویٰ کیا’’میں اپنے گھر سیکٹر ایف سیون ٹو سے اپنے بھائی کے لیے گفٹ خریدنے بلیو…

رنگ روڈ کے نئے انکشافات – جاوید چوہدری

وزیراعظم کو اپنے کانوں اور آنکھوں پریقین نہیں آیا‘ وہ رکے اور زور دے کر کہا ’’آپ دوبارہ بتایے گا‘‘ اینٹی کرپشن پنجاب کے ڈی جی نے اپنی بات دہرا دی‘ وزیراعظم نے کرسی کے ساتھ ٹیک لگا لی اور لمبے لمبے سانس لینے لگے‘ کمرے میں ’’پن…

بس تقریریں سن لیں – جاوید چوہدری

دنیا میں چین کے 161 سفارت خانے ہیں‘ ان میں صرف دو ایسے ملک ہیںجن میں چین کے سیاست دان سفیرتعینات ہیں اور یہ دو ملک ایتھوپیا اور پاکستان ہیں۔ پاکستان میں اس وقت نونگ رونگ Nong Rong)) سفیر ہیں‘ یہ سیاست دان بھی ہیں اور چین کی نیشنل…

گنتے رہا کریں – جاوید چوہدری

’’تم یقین کرو میں سانس کی نعمت سے واقف ہی نہیں تھا‘ کورونا کا بھلا ہو‘ یہ آیا اور اس نے مجھے نعمتوں سے جوڑ دیا‘‘ میں حیرت سے ان کی طرف دیکھنے لگا‘ یہ ’’موسٹ پریکٹیکل‘‘انسان ہیں‘ قسمت‘ قدرت اور خدا پر یقین نہیں رکھتے‘کوشش کو بے انتہا…

دلیپ کمار اور پاکستان – جاوید چوہدری

ناظم جیوا کا تعلق کراچی سے تھا‘پاکستان میں 70 کی دہائی میں تھیلیسیمیا کا مرض بڑھنے لگا تو جیوا صاحب نے فاطمید فائونڈیشن کے نام سے این جی او بنائی اور تھیلیسیمیا کے شکار بچوں کے لیے خون جمع کرنا شروع کر دیا۔ فائونڈیشن آہستہ آہستہ…

میں شدید ڈپریشن میں وہاں سے اٹھی- جاوید چوہدری

پاکستان 1971 میں دو حصوں میں تقسیم ہوگیا‘ پراجیکٹ بریک پاکستان کی ’’آرکی ٹیکٹ‘‘ اندرا گاندھی تھی‘ آج کا بنگلادیش آج کے پاکستان سے 2200کلو میٹر دور تھا جب کہ بھارت کے ساتھ اس کی 4096کلو میٹر کی سرحد تھی‘دونوں سائیڈز پر بنگالی رہتے…

ایک صفت پانچ اختیارات – جاوید چوہدری

میرے ایک دوست کل وقتی یوتھیا ہیں‘ یہ 1980 کی دہائی سے عمران خان کے شیدائی ہیں‘ یہ وزیراعظم کی ہر تقریر ایاک نعبد وایاک نستعین سے لے کر آخر تک سنتے ہیں۔ میں جب بھی حکومت کے بارے میں لکھتا ہوں مجھے سب سے پہلے ان کا فون آتا ہے اور یہ…